- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

سود اور قرضوں کی معیشت سے نجات کے بغیر ملک آگے نہیں بڑھ سکتا‘ سراج الحق

حکومت وفاقی شرعی عدالت میں سو د کے حق میں دی گئی درخواست واپس لے ‘امیر جماعت اسلامی

0 97

امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ وزیر اعظم دوسال میں صرف سونامی لانے کا اپنا وعدہ پورا کرسکے ہیں،آج ہر طرف مہنگائی اوربے روزگاری کا سونامی ہے جس میں عوام ڈوب رہے ہیں،

 

 

حکمرانوں نے پاکستان کے عزت ووقار کو نیلام کردیا ہے،ایٹمی پاکستان کا پاسپورٹ دنیا بھر میں بے توقیر ہوچکا ہے ،جب سے حکومت آئی ہے معصوم بچوں اور بچیوں کے اغواء ،بدفعلی اور قتل کے واقعات میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے ،اپوزیشن کی سابقہ حکمران پارٹیاںدوسال سے حکومت کی سہولت کار بنی ہوئی ہیں ،پیپلز پارٹی ،

 

 

 

مسلم لیگ اور پی ٹی آئی میںایک کلب کے لوگ ہیں،یہ تینوں پارٹیاںظلم و جبر اور اسٹیٹس کو کا نظام مسلط رکھنا چاہتی ہیں،عوام اس ظالمانہ نظام سے نجات کیلئے جماعت اسلامی کا ساتھ دیں ۔

 

 

- Advertisement -

ان خیالات کا اظہار انہوں نے منصورہ میں سیالکوٹ کے اہم سیاسی و سماجی راہنما حافظ خاور مرزا کی اپنے سینکڑوں ساتھیوں سمیت جماعت اسلامی میں شمولیت کے موقع پر خطاب اور میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر پنجاب وسطی کے امیر جاوید قصوری ۔

 

 

 

صوبائی سیکرٹری جنرل بلال قدرت بٹ اور سیکرٹری اطلاعات قیصر شریف بھی موجود تھے ۔ سینیٹر سراج الحق نے جماعت میں شامل ہونے والوں کا خیر مقدم کرتے ہوئے انہیں جماعت اسلامی اور پاکستان کے پرچم کا تحفہ پیش کیا۔

 

 

- Advertisement -

سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ معاشی تباہی سے بچنے کا صرف ایک ہی راستہ ہے کہ سودی معیشت سے فوری تائب ہو کر اللہ اور اس کے رسول ﷺ کے خلاف جاری جنگ کو ختم کردیا جائے ۔

 

 

پاکستان کے نظریے ،اس کیلئے دی گئی لاکھوں جانوں کی قربانیوں اور اپنا سب کچھ پاکستان پر نچھاور کرکے ہجرت کرنے والے آبائو اجداد سے بے وفائی کرنے والوں نے قوم کی منزل کو کھوٹا کردیا ہے ۔

 

 

73سال سے ملک کے اقتدار پر قابض انگریز کے وفاداروںنے وہی نظام مسلط کررکھا ہے جس سے نجات کیلئے تاریخ انسانی کی بے مثال قربانیاں دی گئی تھیں ۔

 

 

عوام فاقہ کشی پر مجبور جبکہ ناجائز ذرائع سے دولت اکٹھی کرنے والے اشرافیہ کو دولت چھپانے کیلئے جگہ نہیں ملتی اس لئے وہ کبھی پانامہ کبھی دوبئی اور کبھی لندن اور امریکہ کے بنکوں میں جعلی ناموں سے کھاتے کھلواتے ہیں۔

 

 

 

دنیا کے 75ملکوں نے سود سے پاک بینکاری کا آغاز کردیا ہے مگر ہماری معیشت آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک کے ملازموں کے ہاتھ میں ہے جو کسی قیمت پر سود چھوڑنے کیلئے تیار نہیں۔ حکومت وفاقی شرعی عدالت میں سود کے حق میں دی گئی نواز شریف دور کی درخواست واپس لے اور آئندہ اس مقدمہ کی پیروی نہ کرے ۔

 

 

 

سود معیشت کا کینسر اور تمام خرابیوں کی جڑ ہے ۔جماعت اسلامی ملک کو حقیقی معنوں میں ایک اسلامی و فلاحی مملکت بنانے کیلئے سود کے خلاف مہم چلارہی ہے۔

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -