- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

خاتون سے اجتماعی زیادتی کرنے والے ملزمان پکڑے گئے

ملزمان نے خاتون کو زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کر کے ویرانے میں پھینک دیا تھا

0 9

راولپنڈی کے قریب ٹیکسلا میں خاتون کو اجتماعی زیادتی کے بعد قتل کرنے ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ملزمان نے خاتون کو زیادتی اور قتل کے بعد ویرانے میں پھینک دیا تھا۔

 

تفصیلات کے مطابق پولیس نے تھانہ ٹیکسلا میں خاتون کی لاش ملنے کا معاملہ حل کر لیا،14ستمبر کو ایک خاتون کی لاش ویرانے سے ملی تھی۔

 

خاتون کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کیا گیا تھا۔پولیس نے لاش کو اسپتال منتقل کر کے میڈیکل اور دیگر ٹیسٹ کرائے تو ڈی این اے رپورٹ سے خاتون سے اجتماعی زیادتی اور قتل ثابت ہو گیا۔

 

- Advertisement -

پولیس نے تین ہفتے کی کڑی تفتیش کے بعد ڈی این سے ٹیسٹ کی مدد سے 3 ملزمان کو گرفتار کیا جن میں نثار خان،عمر شہزاد اور نعیم سجاد شامل ہیں۔

 

اسی طرح راولپنڈی میں خاتون کو بیٹے کے سامنے زیادتی کا نشانہ بنانے والا ٹیکسی ڈرائیور گرفتار کر لیا گیا۔

 

راولپنڈی پولیس کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ نصیر آباد سے تعلق رکھنے والی خاتون کو بیٹے کے سامنے زیادتی کا نشانہ بنانے والا ملزم گرفتار کر لیا گیا ہے۔

 

- Advertisement -

پولیس کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ واقعے کی شکایت درج ہونے کے 12 گھنٹے کے اندر ملزم کو گرفتار کیا گیا ہے۔ ملزم کیخلاف مقدمہ درج کیا جا چکا، ٹھوس شواہد کی روشنی میں ملزم کو سخت سے سخت سزا دلوائی جائے گی۔

 

واضح رہے کہ متاثرہ خاتون کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ وہ اپنے بیٹے کو روحانی علاج کے لیے اٹک لے جا رہی تھی کیونکہ وہ بیمار تھا۔

 

انہوں نے کہا کہ اٹک جانے اور واپس نصیر آباد میں گھر آنے کے لیے ایک ٹیکسی کی تھی۔خاتون نے مزید بتایا کہ راولپنڈی واپس جاتے ہوئے ٹیکسی ڈرائیور نے ایک ویران مقام پر گاڑی کو روکا اور بندوق کی نوک پر انہیں پکڑ کر جنسی استحصال کا نشانہ بنایا۔

 

ملزم نے واقعے کے بارے میں بتانے کی صورت میں خاتون کو دھمکیاں بھی دیں۔ملزم نے خاتون کے بیٹے کو بھی مارا اور موبائل فون چھین لیا۔واقعے سے متعلق بتایا گیا ہے

 

کہ ملزم نے خاتون اور ان کے بیٹے کو چوکی حمیدہ کے علاقے میں سڑک پر چھوڑ دیا اور وہاں سے فرار ہو گیا۔خاتون نے گاڑی کا رجسٹریشن نمبر نوٹ کر لیا تھا

 

جس کے بعد پولیس کو آگاہ کیا۔ پولیس نے پھر فراہم کردہ شواہد اور معلومات کی روشنی میں ملزم کو ٹریس کر کے گرفتار کر لیا ہے۔

 

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -