- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -

جیل میں میرے کمرے اور باتھ روم میں کیمرے لگائے گئے تھے

جیل میں اپنے ساتھ ہونے والا سلوک بتا دیا تو ان کو منہ چُھپانے کی جگہ نہیں ملے گی۔ مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کا انٹرویو

0 8

پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کا کہنا ہے کہ جیل میں میرے کمرے اور باتھ روم میں کیمرے لگائے گئے تھے۔

 

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے اپنے انٹرویو میں جیل میں روا رکھے جانے والے سلوک کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ آج یہ نہیں بتاؤں گی، آج جب میں جدوجہد کررہی ہوں

تو بالکل اس چیز کے پیچھے چھپنا نہیں چاہتی۔

 

- Advertisement -

انہوں نے کہا کہ میں اپنے آپ کو متاثرہ ظاہر کرنا نہیں چاہتی، آج یہ رونا نہیں رونا چاہتی کہ میرے ساتھ زیادتی ہوگئی۔

 

 

 

مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے کہا کہ میں دو مرتبہ جیل جا چکی ہوں اور جیل میں اپنے ساتھ یعنی ایک خاتون کے ساتھ ہونے والا سلوک بتا دیا

 

تو ان کو منہ چھپانے کی جگہ نہیں ملے گی۔

- Advertisement -

انہوں نے کہا کہ اگر مریم نواز کا دورازہ توڑ کر کمرے میں گھس سکتے ہیں، اس کے والد کے سامنے حق بات کرنے پر گرفتار کرسکتے ہیں۔

 

 

 

اگر اس کے کمرے اور باتھ روم میں کیمرے لگا سکتے ہیں اور ذاتی حملے کروا سکتے ہیں تو پاکستان کی کوئی عورت محفوظ نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ عورت چاہے

 

پاکستان میں ہو یا دنیا میں ہو وہ کمزور نہیں ہوسکتی۔ یاد رہے کہ گذشتہ روز بھی مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے ایک انٹرویو دیا تھا جس میں انہوں نے کہا تھا کہ شہباز شریف کے انداز میں بھی بات کرنے کی کوشش بھی کی گئی لیکن میں تو بات کرنے کے حق میں بھی نہیں ہوں۔

 

شہباز شریف کی طرح بات کرنے کو کمزوری سمجھا جاتا ہے۔ایک سوال کے جواب میں مریم نواز نے کہا کہ اب ایک پیج نہیں رہا۔دو تین بن چکے ہیں۔

 

ہم پی ڈی ایم جماعتوں سے توقع نہیں کرتے کہ وہ ہمارا بیانیہ لے کر چلیں۔ہمارے بیانیے کا بوجھ اٹھانا سب کے بس کی بات نہیں ہے۔

 

مریم نواز نے دوران انٹرویو واضح طور پر کہا کہ حکمران جماعت پی ٹی آئی سے مل کر چلنے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔

 

- Advertisement -

- Advertisement -

- Advertisement -