ادبی نگینے (شاعر) محمد رمضان شاکر ۔ پاکپتن

ادبی نگینے (شاعر) محمد رمضان شاکر۔ پاکپتن

شروع اللہ کے نام سے

پڑھنا پہلے ہر کام سے

کرو ذکر مصطفیٰ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلّم

تو کرنا درود و سلام سے

دل میں آئی کہ ریکارڈ بناؤں

ہر ادیب پہ لکھتا جاؤں

پہلے پڑھی ہو نہ سنی ہو

ایسی شاہکار سی ایک نظم سناؤں

کوئی بڑا ہو یا چھوٹا ہو

کوئی پتلا ہو یا موٹا ہو

سدا خوشیاں ان کا مقدر ٹھہریں

کوئی ہنستا ہو یا روتا ہو

یہ جو رائیٹر سارے ہیں

ادب کے چاند ستارے ہیں

کوئی ہے جند تو کوئی ہے جان

لگتے سب ہی پیارے ہیں

حکیم سعید انسان بڑے ہی پیارے تھے

پیار کرتے نونہال ان سے سارے تھے

نونہال کا ساتھ نہ چھوڑا برکاتی جی نے

مشکل میں منہ نہ موڑا برکاتی جی نے

انسان بڑے ہی معقول تھے اشتیاق احمد

گلشن کے مہکتے پھول تھے اشتیاق احمد

سیدھے سادھے اور بھلے مانس

لکھاری ہیں پیارے فاروق دانش

ادبی ہو سکتا ہے کیسے وہ

واقف نہیں انسپکٹر احمد عدنان سے جو

شعیب مرزا ہیرا ہیں ادب اطفال کا

کام ان کا بڑے ہی کمال کا

نزیر انبالوی کی کیا بات ہے

ان سائیکلو پیڈیا ان کی ذات ہے

کتاب پروجیکٹ پہ ریکارڈ کام ہو رہا ہے

فہیم عالم بھیا کا خوب نام ہو رہا ہے

نوید احمد سے اپنی دوستی یاری ہے

کہ لکھا ان کا ہوتا خوب معیاری ہے

محفل ان کی سجاتے رہتے ہیں اکثر

افق دہلوی یاد آتے رہتے ہیں اکثر

دھوم مچائیں تراجم فیصل بھائی کے

سب کا دل بہلائیں تراجم فیصل بھائی کے

چلتے چلتے اچانک کہیں گئے ہیں ٹھہر

اچھے لکھاری پیارے لکھاری حنیف سحر

چمکتا دمکتا تھا اب پڑ گیا ہے ماند

ادب اطفال کا گہنا مصطفیٰ چاند

اک بات کہوں گا میرے حضور

ہمت کا پہاڑ محبوب الہی مخمور

سو باتوں کی ایک ہی بات

فخر ادب ہے نوشاد عادل کی ذات

ہر موضوع پہ لکھا بے شمار دوستو

جواں ہمت لکھاری خلیل جبار دوستو

کریں ہر وقت کچھ نیا کرنے کی تیاری

ادب دوست سید ذوالفقار علی بخاری

فیس بک پہ ہر دم مصروف رہتے ہیں

حیدرآباد میں بھیا اکمل معروف رہتے ہیں

اندھیرے میں روشنی کی امید دوستو

جگائیں پیارے بھیا عارف مجید دوستو

ارسلان اللہ خان نے مقام پایا ہے خوب

نظم و نعت میں نام کمایا ہے خوب

تنزیلہ احمد جب سے آئی ہیں

نظم و نثر میں خوب چھائی ہیں

اچانک ہی ابھرا ہے نام علی عمران کا

اک ادبی شہزادہ ہے جو ملتان کا

بنا کے لائبریری مجید احمد جائی نے

کام کیا ہے نیک اس بھائی نے

ابن یوسف نے اپنا آپ منوایا ہے

تبھی تو چاروں طرف چھایا ہے

نظم و نثر کا ہے اک شہزادہ

نعمان صابری المعروف غلام زادہ

بات ان میں کچھ خاص ہے یارو

بندہ زندہ دل ابن آس ہے یارو

مہوش اسد شیخ نے میدان مارا ہے

کام عمدہ کیا سارے کا سارا ہے

کم لکھتے ہیں مگر کمال لکھتے ہیں

علی حیدر ہمیشہ لازوال لکھتے ہیں

کام ہی کچھ ایسا لاجواب ہوا ہے

سلمان یوسف صاحب کتاب ہوا ہے

فہیم زیدی صاحب کو پڑے گی اب پلنٹی

کہ شائع ہوئی ہے کتاب مٹھو اور بنٹی

اک سچی بات کہوں گر میری مانو

ادب اطفال کا سرمایہ ڈاکٹر فضیلت بانو

ہر فن مولا اپنے معروف احمد چشتی

صاحب علم و فن ، نادر و نایاب ہستی

انابیہ نور ، آستر رندھاوا ، فاکہہ قمر

مل رہا ہے ان کو محنت کا خوب ثمر

علیشہ چوہدری ، رمشاجاوید شہزادی ہدی

خوب خوب کر رہی ہیں قلم کا حق ادا

فیصل ابراہیم،محسن ابڑو،احمد شیر تبسم

ملک احسن ،ںسیف الرحمن ، اور بلال اسلم

سبحان اللہ ، ماشاءاللہ، واہ بھئی واہ

بن گئے ہیں نائب مدیر عاطف شاہ

انداز بیان الگ اور سوچ الگ

شاعروں میں اویس بلوچ الگ

ان کے سامنے لگے شاعری پھیکی پھیکی

دادا استاد ہیں جناب احمد حاطب صدیقی

ضیاء اللہ محسن شان ادب ہیں

نظمیں ان کی جان ادب ہیں

لکھتی ہیں نظمیں پوری پوری

شاعرہ ہیں عمدہ صاعقہ نوری

کہانی کا میدان ہو یا ہو دفتر

کامیاب و کامران ٹھہریں ندیم اختر

معصوم صورت اور اور پیارا انسان ہے

شہباز اکبر الفت دوستوں کی جان ہے

ادیب نگر کی محفل سجاتے ہیں حسن اختر

نت نئے لوگوں سے ملواتے ہیں حسن اختر

شاہد اقبال آف ملتان لکھیں شاندار

تحریریں ان کی ہوتی ہیں جاندار

سائنسی بابو ڈاکٹر طارق ریاض خان

سائنسی کہانیاں بنی ہیں ان کی پہچان

افسانہ نگاری میں ان کا جواب نہیں ہے

صفدر حیدری کتنا لکھتے ہیں حساب نہیں ہے

ہر دل عزیز اور پیارے لکھاری

کہانی کار ، ڈرامہ رائیٹر اسد بخاری

بہترین لکھاری ہیں نعیم احمد سیال

مزاح کی صورت پیش کریں نیا خیال

وطن کا محافظ پولیس فورس کا جوان

بچوں کا لکھاری احمد شیر خان

مسکن ان کا پیارا شہر کراچی

راحت عائشہ اور صالحہ عزیز آپی

عمدہ لکھتے تھے شیر محمد رحمانی

مزہ بڑا آتا تھا ان کی پڑھ کے کہانی

پیغام کے مدیر ہوئے ہمارے نعیم بھیا

ادب کے اسیر ہوئے پیارے نعیم بھیا

سر شاہد اقبال آف گجرانوالہ

سدا خوش رہیں یہ دعا ہے شالا

سر امان اللہ نظم لکھ کے سر تال میں

تہلکہ مچا دیتے ہیں ادب اطفال میں

گلدستہ ٹوٹ بٹوٹ کا کر کے اجراء

جعفر صاحب نے کیا ہے کام بڑا

قلم کا اپنے خوب دکھا کے جوہر

خوب داد سمیٹ رہی ہیں فریدہ گوہر

آپی تسنیم جعفری اور شمیم عارف

لکھاری ہیں عمدہ یہی ان کا تعارف

سب کے دلوں کو بھا گئی ہے

کتاب رخشندہ آپی کی چھا گئی ہے

اک ایک لفظ جیسے ہوں گہنے

گل رعنا آپی کے تراجم کیا کہنے

ادب سے دور اور دل کے پاس رہتا ہے

جانے کیوں سلطان محمود اداس رہتا ہے

ایک دن چھو لیں گے یہ فلک

اللہ رکھا چوہدری اور ظہیر ملک

ناصر بیگ ، ساجدکمبوہ اور مظہر مشتاق

واللہ تحریریں ان۔ کی بٹھائیں دھاک

فل فارم میں آئے ہوئے ہیں

خواجہ مظہر آج کل چھائے ہوئے ہیں

ابھر کے آیا ہے سامنے بیٹا ملتان کا

خالد نور نمبر ون لکھاری سیریز عمران کا

پیارے انسان تھے مجیب ظفر انوار

کر کے پردہ دنیا سے چلے گئے اس پار

عمدہ لکھنے والے اور باہمت انسان

دوستوں کے دوست تھے ظفر احمد خان

لکھاری بھی ہیں دوست بھی ہیں خاص

وقاص اسلم کمبوہ اور بھیا تصور عباس

ببرک کارمل بھیا شہ سوار ادب ہیں

کالم ، مضامین ان کے سب غضب ہیں

ادب کی شمع جلائے ہوئے ہیں

نور محمد جمالی چھائے ہوئے ہیں

پہلے جی بوائے اب باکسر بھیا لائے ہیں

امجد جاوید سب کے دل کو بھائے ہیں

عبیرہ رانی چہک رہی ہے گلستان ادب میں

بابا کا کرے گی نام روشن جہاں ادب میں

ادبی کھچڑی سے سائرہ نے ریکارڈ بنایا ہے

نظم لکھنے پہ مجھے بھی اکسایا ہے

ہنر سے اپنے سب کو چونکا رہی ہیں

مریم شہزادی سرورق شاہکار بنا رہی ہیں

عزم و ہمت کا استعارہ ہے دوستو

عارف شین ادب کا تارا ہے دوستو

فخر بہاولنگر ہیں فرحان اشرف بھائی

منفرد لکھیں تبھی تو ہے پہچان بنائی

لکھنے والے ریکارڈ توڑے عبدالصمد مظفر نے

قلم کتاب سے لوگ جوڑے عبدالصمد مظفر نے

حقیقت زیادہ اور فلسفہ کم ہوتا ہے

مزمل صدیقی کی ہر تحریر میں دم ہوتا ہے

پشاور کے خوبرو اور چمکتے ہوئے ستارے

محقق، معلم جناب راج محمد آفریدی پیارے

عبیداللہ انور جانے کہاں کھو گئے ہیں

لکھنے لکھانے سے بہت دور ہو گئے ہیں

حافظ حمزہ شہزاد ہیں پیارے لکھاری

بھیا جاگو کہ چلتی کا نام ہے گاڑی

سائرہ یونس ، تنزیلہ یوسف ، افراح خان

جہان ادب میں بنا رہی ہیں اپنی پہچان

لکھ کے نظم ننھی چڑیا آغاز کیا ہے

پاپا کا دل مہک نے شاد کیا ہے

آمین بابر اردو پنجابی کے شاعر بے مثال ہیں

جس صنف میں بھی لکھیں لکھتے کمال ہیں

نظم گوئی میں نہیں کوئی ان کا ثانی

بے مثال شاعرہ ہیں آپی نیئر رانی

جو بھی ہے سعادت اپنے نام کرتے ہیں

قاری عبداللہ جب تلاوت قادر و کلام کرتے ہیں

ادب اطفال پہ لکھ کے مقالہ کمال کر دیا

کاشف بشیر کاشف نے کام بے مثال کر دیا

ادب کے سچے خیر خواہ اور رفیق

دوستوں کے دوست جناب یاسین صدیق

نظم گو شاعر تھے ادیب سمیع چمن آبادی

نثر کے ماہر تھے ادیب سمیع چمن آبادی

جاسوسی ادب کے نئے جہاں کھول رہا ہے

عماد حسن بھائی کا طوطی بول رہا ہے

ادب اطفال کا ہے معتبر ترین نام

اچھا لکھاری پیارا لکھاری جاوید بسام

بک سیلر بھی ہیں اور لکھاری بھی ہیں

فراز علی حیدری اچھے قاری بھی ہیں

ہر چھوٹا بڑا مانے کام جن کا

عبدالرشید فاروقی ہے نام ان کا

تحریریں لکھ کے عمدہ اور پیاری

ہوا صاحب کتاب احمد رضا انصاری

زبیر ارشد ، عبداللہ نظامی اور روحان دانش

نعمان حیدر ،خورشید نواز اور حسنین تابش

اپنے آپ میں انجمن ہیں فیصل شہزاد بھیا

سدا سلامت رہیں اور زندہ باد بھیا

شاعر لیاقت پور ایوب اختر بھائی

نظموں نے ان کی جگ میں دھوم مچائی

پیاری لکھاری ماہ نور نعیم اور قرات العین

نئے پرانے پڑھنے والے سارے ان کے فین

کبھی روٹھ جاتے ہیں کبھی مان جاتے ہیں

علی اکمل زمانے سے نالاں نظر آتے ہیں

نظم گو شاعر تھے ادیب سمیع چمن آبادی

نثر کے بھی ماہر تھے ادیب سمیع چمن آبادی

رائیٹر بھی ہیں ایکٹر بھی اتفاق سے

واقف تو ہوں گے آپ فیصل مشتاق سے

عبیدالرحمن مبشرعطاری صداقت حسین ساجد

حکیم خان حکیم،ظفر محمود انجم ، رانا شاہد

کم عمر لکھاریہ ہیں اقراء اعجاز

دل کو بھائے ان کا لکھنے کا انداز

اچھا لکھنے والوں میں صابر فیاض بھی ہیں

اور ادب کے روح رواں ڈاکٹر ریاض بھی ہیں

پنڈی سے اور نہ ہی کہوٹہ سے

اظہر عباس رائیٹر پیارے کوئٹہ سے

حافظ مظفر محسن مزاح بھرپور لکھتے ہیں

کم مگر عمدہ میرے حضور لکھتے ہیں

رانا علی رضا،اور آئی جی غلام رسول زاہد

مشتاق قادری،امتیازعارف ، عبدالحفیظ شاہد

ایک پیارے سے بھائی ہیں غلام عباس بھٹی

کبھی لکھا کرتے تھے جو تحریریں اچھی اچھی

نعت شریف سنا رہے ہیں شاعری سیکھا رہے ہیں

مصعب بھائی جادو اپنی آواز کا جگا رہے ہیں

سارے ادبی دوست یہ مل کے فریاد کرتے ہیں

لوٹ آؤ توصیف بھائی سب یاد کرتے ہیں

نگارش یہ شاکر کی کرنا قبول دوستو

معاف کرنا جو ہو گئی ہو بھول دوستو

اپنی رائے کا اظہار کریں