اہم خبریںپاکستان

زمینوں پر قبضے کیس میں مسلم لیگ ن کے ایم این اے گرفتار

پنجاب کی اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ (ACE) نے منگل کو پاکستان مسلم لیگ نواز (پی ایم ایل این) کے رکن اسمبلی چوہدری محمد اشرف کو زمینوں پر قبضے کے کیس میں گرفتار کر لیا، ایکسپریس نیوز اطلاع دی

چوہدری محمد اشرف حکمراں جماعت مسلم لیگ (ن) کے ٹکٹ پر حلقہ این اے 161 (ساہیوال-2) سے رکن قومی اسمبلی (ایم این اے) منتخب ہوئے تھے۔

اے سی ای نے قانون ساز پر پٹواری (ریونیو آفیسر) محمد سلیم کے ساتھ ملی بھگت سے جعلسازی کے ذریعے 157 ایکڑ سے زائد سرکاری زمین پر غیر قانونی قبضہ کرنے کا الزام لگایا ہے۔

اے سی ای نے دعویٰ کیا کہ صوبائی محکمہ اینٹی کرپشن نے ایم این اے اشرف پر الزامات ثابت ہونے کے بعد انہیں حراست میں لے لیا۔

ذرائع کے مطابق ملزم نے اپنی زرعی زمین کی ملکیت چھپا کر شریف احمد ہاشمی کے نام پر الاٹ کی تھی۔

یہ بھی پڑھیں: سابق ڈپٹی اسپیکر دوست محمد مزاری گرفتار

اس سال اکتوبر کے اوائل میں، ACE نے پنجاب اسمبلی کے سابق ڈپٹی اسپیکر دوست محمد مزاری کو سرکاری اراضی میں غبن کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔

اطلاعات کے مطابق، صوبائی قانون ساز کی گرفتاری کی تصدیق ان کے کزن شہاب مزاری نے کی، جن کا کہنا تھا کہ انہیں اس وقت گرفتار کیا گیا جب وہ ہسپتال میں اپنے دادا کی عیادت کر رہے تھے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق اے سی ای نے مزاری کو انہی الزامات پر 11 اکتوبر کو طلب کیا تھا تاہم وہ اس کے سامنے پیش نہیں ہوئے۔

روجھان کے اسسٹنٹ کمشنر کی رپورٹ کے مطابق مزاری نے ہزاروں ایکڑ اراضی میں غبن کیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button